Aye Shafi e Umam Shah e Zeejaah Lay Khabar Lyrics Urdu/English

aye shafi e umam shah e zeejaah lay khabar lyrics

Aye Shafi e Umam Shah e Zeejaah Lay Khabar Lyrics

By Ala Hazrat Imam Ahmed Raza Khan

اے شافعِ اُمَم شہِ ذِی جاہ لے خبر

لِلّٰہ لے خبر مِری لِلّٰہ لے خبر


دریا کا جوش، ناؤ نہ بیڑا نہ ناخدا

میں ڈُوبا، تُو کہاں ہے مِرے شاہ لے خبر


منزل کڑی ہے رات اندھیری میں نَابَلَدْ

اے خِضر لے خبر مری اے ماہ لے خبر


پہنچے پہنچنے والے تو منزل مگر شہا

اُن کی جو تھک کے بیٹھے سرِ راہ لے خبر


جنگل درندوں کا ہے میں بے یار شب قریب

گھیرے ہیں چار سَمْت سے بدخواہ لے خبر


منزل نئی عزیز جُدا لوگ ناشناس

ٹُوٹا ہے کوہِ غم میں پرِکاہ لے خبر


وہ سختیاں سوال کی وہ صورتیں مُہِیْب

اے غمزدوں کے حال سے آگاہ لے خبر


مُجرم کو بارگاہِ عدالت میں لائے ہیں 

تکتا ہے بے کسی میں تِری راہ لے خبر


اہلِ عمل کو اُن کے عمل کام آئیں گے

میرا ہے کون تیرے سِوا آہ لے خبر


پُر خار راہ، برہنہ پا، تِشنہ آب دور

مَولیٰ پڑی ہے آفتِ جانکاہ لے خبر


باہَر زبانیں پیاس سے ہیں، آفتاب گرم

کوثر کے شاہ کَثَّرَہُ اللہ لے خبر


مانا کہ سخت مجرم و ناکارہ ہے رضاؔ

تیرا ہی تو ہے بندۂ درگاہ لے خبر

Aye shafi e umam shah e zeejaah lay khabar
Lillah le khabar meri Lillah le khabar

Darya ka josh, naaw, na beraa na naa Khuda
Main dooba tu kahan hay mere shaah le khabar

Manzil kari hay raat andheri main naa balad
Aay khidr le khabar meri aay maah le khabar

Pohonche pohonchne waale to manzil magr shaha
Un ki jo thak key beithe sar e raah le khabar

Jangal darindo ka hay mai be yaar shab qareeb
Ghere hain chaar samt sey badkhwaah le khabar

Manzil nayi azeez juda log naa shanaas
Toota hay koh e gham mein pare kaah le khabar

Woh sakhtiyan sawaal ki woh sooratein muheeb
Aay ghamzadon key haal sey aagah le khabar

Mujrim ko baargaah e adalat me laaye hain
Takta hay be kasi me teri raah le khabar

Ahl e amal ko unke amal kaam aayenge
Mera hay kaun tere siwa aah le khabar

Pur khaar raah barhana paa tishna aab door
Mawla pari hay aafat e jaan kaah le khabar

Baahar zubanein pyaas sey hain aaftaab garam
Kausar key shaah katharahullah le khabar

Maana key sakht mujrim o naakarah hay Raza
Tera hi to hay banda e dargaah le khabar

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *